بدھ , 29 ستمبر 2021

اسرائیل پر ایک بار پھر سائبر حملہ، لاکھوں طلبہ کی انفارمیشن چوری

تل ابیب: ایک بار پھر قبلہ اول کی غاصب صیہونی حکومت پر سائبر حملہ ہونے کی خبر ہے جس کے باعث دسیوں ہزار صیہونی طلبا کی انفارمیشن سوشل میڈیا تک سرایت کر گئی ہے۔

ذرائع کے مطابق ہیکرز کے ایک گروہ نے ایک ایسی کمپنی کے ڈیٹا تک رسائی حاصل کر لی ہے جس کے پاس مقبوضہ فلسطین کی کئی یونیورسٹیوں میں زیر تعلیم صیہونی طلبا کی معلومات و تفصیلات تھی۔

صیہونی تحقیقات یہ بتاتی ہیں کہ دوہزار چودہ سے اب تک کے دولاکھ اسی ہزار صیہونی طلبا کی انفارمیشن جو ایک ویب سائٹ پر موجود تھی، ہیکرز کے ہاتھ لگ گئی ہے جن میں سے قریب ایک لاکھ طلبہ کی ایمیل آئی ڈیز اور انکے پاسورڈز بھی نامعلوم ہیکرز کے اختیار میں ہیں۔

صیہونی میڈیا کا کہنا ہے کہ ہیکرز کے ایک گروہ نے ایکیڈیم یا اکیڈمی نامی صیہونی جاب نیٹ ورک سے لاکھوں صیہونی طلبا کی انفارمیشن کو چوری کر لیا ہے۔ یہ نیٹ ورک جاب کی تلاش میں سرگرم صیہونی طلبا کے لئے ایک اہم نیٹ ورک سمجھا جاتا ہے۔

ہیکرز نے اپنے ٹیلی گرام پر ایک فوٹو شیئر کر کے یہ اعلان کیا ہے کہ انہوں نے صیہونی طلبا کے ایمیلز، انکے پاسورڈ اور حتیٰ انکی تاریخ پیدائش تک رسائی حاصل کر لی ہے۔

یہ بھی دیکھیں

ایرانی و ہندوستانی وزرائے خارجہ کی ملاقات، باہمی تعاون کے مزید فروغ کے لئے پر عزم

نیویارک: اسلامی جمہوریہ ایران اور ہندوستان کے وزرائے خارجہ کے درمیان اقوام متحدہ کی جنرل …