جمعرات , 2 دسمبر 2021

عراقی رضاکار فورس کی ترکی کو کھلی دھمکی، انقرہ کی جارحیت پر خاموشی شرمناک ہے

بغداد: عراق کے سنجار شہر کے ایک اسپتال پر ترکی کے ڈرون حملے کے بعد عراقی رضاکار فورس میں شامل گروہ عصائب اہل الحق کے سکریٹری جنرل نے ترکی کے اقدامات پر عراقی حکام کی خاموشی پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے اس کو شرمناک قرار دیا ہے۔

فارس نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق عصائب اہل الحق کے سکریٹری جنرل شیخ قیس الخزعلی نے جمعہ کے روز ترکی کی جانب سے ملک کے اقتدار اعلی کی خلاف ورزی پر رد عمل ظاہر کیا۔

انہوں نے ٹوئٹ کیا کہ حکومتی اور پرائیوٹ اداروں کی جانب سے جارحیت پر مسلسل خاموشی واقعا شرمناک ہے۔

عراقی رضاکار فورس کے کمانڈر نے اپنے بیان میں کہا کہ اس خاموشی کی وجہ سے ترک حکومت کے حوصلے مزید بڑھ جائیں گے اور اگر خاموشی جاری رہی تو جارحیتوں کا سلسلہ خطرناک سطح تک پہنچ جائے گا ۔

واضح رہے کہ منگل کے روز عراقی ذرائع نے خبر دی تھی کہ ترکی کے جنگی طیاروں نے سنجار میں سیکورٹی اہلکاروں کے ایک اسپتال کو نشانہ بنایا تھا۔

یہ بھی دیکھیں

ایران اور افغانستان کے مابین سرحدی جھڑپ غلط فہمی کا نتیجہ : طالبان

کابل: طالبان کے ترجمان نے کہا ہے کہ ایران اور افغانستان کے مابین سرحدی جھڑپ …