جمعرات , 20 جنوری 2022

پاک افغان تجارت پاکستانی روپے میں کرنے کا فیصلہ

پاکستان اور افغانستان کے درمیان تجارت پاکستانی روپے میں کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

وزیرخزانہ شوکت ترین نے قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کو بتایا ہے کہ افغانستان کو ڈالرکی کمی کا خدشہ پیدا ہوگیا ہے۔

انھوں نے کہا کہ افغانستان میں مختلف معاملات چلانےکے لیے پاکستان سے بھی لوگوں کوبھیجاجاسکتا ہے۔

دوسری جانب وزیر خزانہ شوکت ترین نے مزید بتایا کہ بھارتی ہیکرز کی جانب سے 2019 میں بھی ایف بی آر کا سسٹم ہیک کیا جاچکا ہے،سسٹم ہیک کرنےکی سزاجس کو ملنی چاہیے تھی اس کومل چکی، تاہم اب ایف بی آر میں تمام سسٹم کو اپ گریڈ کیا جا رہا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

نئے سال کا پہلا ہفتہ عوام پر مہنگائی کا مزید بوجھ ڈال گیا

ریلیف کے منتظر عوام کے لیے نئے سال کا پہلا ہفتہ بھی مہنگائی کا مزید …