پیر , 24 جنوری 2022

حماس، فلسطینی قیدیوں کی رہائی کی کوششوں سے دستبردار نہیں ہوگی: اسماعیل ہنیہ

غزہ: تحریک حماس کے سربراہ نے کہا ہے کہ ان کی تحریک فلسطینی قیدیوں کے مسئلے کو خاص اہمیت دیتی ہے اور ان کی رہائی کی مسلسل کوشش کررہی ہے۔

حماس کے سربراہ اسما‏عیل ہنیہ نے کہا کہ تحریک حماس کے لئے فلسطینی قیدیوں کا مسئلہ ایک خاص قومی مسئلہ ہے۔ اسماعیل ہنیہ نے حماس کو ایک حریت پسند اور قوم پرست تحریک قرار دیا اور کہا کہ حماس، استقامت و جہاد کے میدان میں سرفہرست ہے۔

اسماعیل ہنیہ نے کچھ دنوں پہلے بھی اس بات کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہ صیہونی حکومت کو قیدیوں کے تبادلے پر مجبور کردیں گے کہا تھا کہ قیدیوں کا مسئلہ تحریک حماس کی ترجیحات میں سرفہرست ہے اور وہ قیدیوں کا مسئلہ آگے بڑھانے کے لئے دو طریقوں پر عمل پیرا ہیں؛ ایک تو یہ کہ جیلوں میں قیدیوں کو شرافت مندانہ زندگی فراہم کی جائے اور دوسرے یہ کہ فلسطینی قیدیوں کو صیہونی غاصبوں کی جیلوں سے مکمل رہائی دی جائے۔

قابل ذکر ہے کہ صیہونی حکام، قیدیوں کے تبادلے کے معاملے میں تحریک حماس کے ساتھ مسلسل رخنہ اندازی کر رہے ہیں۔

یہ بھی دیکھیں

ترکی اور اسرائیل کے وزرائے خارجہ کے مابین باضابطہ گفتگو

انقرہ: ترکی اور اسرائیل کے وزرائے خارجہ کے مابین ٹیلی فونی گفتگو ہوئی ہے۔ ترکی …