ہفتہ , 28 مئی 2022

ایرانی سفیر کا اسلامو فوبیا کے خلاف جنگ میں اسلامی ممالک کی صلاحیتوں پر زور

اسلام آباد: پاکستان میں تعینات ایرانی سفیر نے اسلامو فوبیا اور اسلام کے دشمنوں کی غیر تعمیری کوششوں کا مقابلہ کرنے کے لیے اسلامی ممالک کی تنظیم (OIC) کی صلاحیت کو بروئے کار لانے کی ضرورت پر زور دیا۔

یہ بات "سید محمد علی حسینی” نے اتوار کے روز پاکستان میں ہونے والے وزرائے خارجہ کی سطح کی او آئی سی کے اجلاس کے موقع پر ایک ویڈیو پیغام میں کہی۔
انہوں نے کہا کہ او آئی سی کی بنیاد فلسطینی کاز کی حمایت اور مقبوضہ زمینوں کی آزادی کے لیے رکھی گئی تھی اس لئے اس امید کو ختم نہیں ہونا چاہیے۔
حسینی نے کہا کہ اسلامی ممالک کے درمیان اتحاد اور انصاف کے حصول کی تحریک عالم اسلام کے بلند مقاصد کے حصول میں بنیادی اور فیصلہ کن کردار ادا کرتی ہے۔
انہوں نے کہا کہ اسلامی ممالک کی صلاحیت، جس میں ترقی اور خوشحالی شامل ہے، ایک منفرد صلاحیت ہے جسے اگر مؤثر طریقے سے استعمال کیا جائے تو امت اسلامیہ کے مفادات کو پورا کر سکتی ہے اور اسلام مخالف اور اسلام دشمنوں کو بھی روک سکتی ہے۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان میں ہونے والے اجلاس سمیت تنظیم کے باقاعدہ اجلاس ایک موقع فراہم کرتے ہیں جسے مسلم دنیا کے اہم ترین مسائل سے نمٹنے کے لیے لیا جانا چاہیے۔
یہ بات قابل ذکر ہے کہ اسلامی تعاون تنظیم کے وزرائے خارجہ کا 48 ویں اجلاس 22 اور 23 مارچ کو حکومت پاکستان کی میزبانی میں اس ملک کے دارالحکومت اسلام آباد میں منعقد ہوگا۔
منگل کو اسلامی تعاون تنظیم کے رکن وفود کی موجودگی میں سینئر ماہرین کا اجلاس ہوگا اور بدھ کو عالم اسلام کی اس عظیم تنظیم کے وزرائے خارجہ کونسل کا اجلاس پاکستان میں ہوگا۔

یہ بھی دیکھیں

امریکہ نے وسطی ایشیا کو اپنی بائیولوجیکل سرگرمیوں کا مرکز بنا لیا: روس

امریکہ نے وسطی ایشیا کو اپنی بائیولوجیکل سرگرمیوں کا مرکز بنا رکھا ہے اور روس …