بدھ , 30 نومبر 2022

دعا کا انٹرویو لینے والی خاتون کیخلاف قانونی کارروائی کرینگے: مہدی کاظمی

کراچی سے لاہور جاکر رشتہ ازدواج میں منسلک ہونے والی دعا زہرہ کے حالیہ انٹرویو پر والد مہدی کاظمی نے سخت ردعمل کا اظہارکیا ہے۔

سندھ ہائیکورٹ نے دعا زہرہ کو اپنی مرضی سے فیصلہ کرنے کا اختیار دیا ہے جس کے بعد دعا اپنے شوہر ظہیر کے ساتھ موجود ہے۔

ظہیر سے شادی کے بعد دعا کا پہلی بار تفصیلی انٹرویو سامنے آیا جس پر دعا کے والد مہدی کاظمی نے انٹرویو لینے والی خاتون کے خلاف قانونی کارروائی کا اعلان کیا ہے۔

ویڈیو بیان میں مہدی کاظمی نے کہا کہ ’ مجھے اس کا اندازہ تھا کہ اس قسم کی ویڈیو سامنے آئیں گی اور ہو سکتا ہے کچھ دنوں میں مزید ویڈیوز سامنے آ جائیں، بچی ان کے قبضے میں ہے وہ جو چاہے اس سے بلوائیں‘۔

انہوں نے کہا کہ ‘جو خاتون انٹرویو کررہی ہیں وہ دعویٰ کررہی ہیں کہ ظہیر اور دعا سے ان کا رابطہ شروع سے تھا، میں انہیں قانونی نوٹس بھیجنے کے لیے اس وقت سپریم کورٹ میں ہوں، ابھی دیکھیے گا یہ سب دوبارہ غائب ہوجائیں گے ۔’

دعا کے والد کا مزید کہنا تھا کہ ‘اس ویڈیو میں جو باتیں تھیں سب جھوٹ کا پلندا تھا، میری بیٹی ایک گینگ کے قبضے میں ہے اور ذہنی دباؤ کا شکار ہے’

یہ بھی دیکھیں

سپاہ پاسداران نے جنوبی علاقے میں ایک عرب انٹیلی جنس سروس کی سازشوں کو بے نقاب کیا

تہران:سپاہ پاسداران انقلاب نے ایک ایک رجعت پسند عرب انٹیلی جنس سروس کے ایک ایجنٹ …