پیر , 26 ستمبر 2022

یونان نے امریکی حکم پر ایرانی کشتی کو ایرانی ردعمل کے بعد چھوڑنے پر رضا مند ہوا۔

ایکنا انٹرنیشنل ڈیسک کے مطابق ایرانی رد عمل کے بعد یونان نے ایرانی کشتی کو آزاد کردیا ہے ۔

اے ایف پی نے رپورٹ دی ہے کہ یونانی بندرگاہ کی پولیس کو آج اتوار کے روز مطلع کیا گیا کہ ایرانی تیل لے جانے والا ایک روسی آئل ٹینکر، جسے اپریل کے وسط میں امریکی عدلیہ کی درخواست پر یونان میں پکڑا گیا تھا، اپنی جہاز رانی کی سرگرمیاں دوبارہ شروع کر سکتا ہے۔

رپورٹ کے مطابق، 19 اپریل کو یونانی حکام کی درخواست پر، یونانی سیکورٹی اہلکاروں نے ایک پیگاسس ٹینکر، جسے بعد میں لانا کا نام دیا گیا، کو Euboea جزیرے پر پکڑ لیا، جس میں 115,000 ٹن ایرانی تیل موجود تھا۔

امریکی اقدام پر اسلامی جمہوریہ ایران کے حکام نے شدید ردعمل ظاہر کیا اور تہران نے بین الاقوامی میری ٹائم آرگنائزیشن سے یونانی عدالت کے فیصلے میں مداخلت کرنے کی درخواست کی۔

بعد میں ایرانی سپاہ نے یونانی کشتی کو روک دیا تھا اور دباو میں آکر ایرانی کشتی کو چھوڑنے کا حکم دیا گیا ۔

یہ بھی دیکھیں

مسلمانوں میں لڑائی جھگڑے،اختلافات کا خاتمہ ہونا چاہیے: مقتدیٰ صدر

بغداد:عراق کے مذہبی اور سیاسی رہنما مقتدی صدر نے مسلمانوں میں لڑائی جھگڑے ، جنگ …