اتوار , 25 ستمبر 2022

ڈالر کے مقابلے روپے کی قدر کم ہونے کے معاملے میں مودی کو جواب دینا چاہیئے، یشونت سنہا

۔ بھارت کے اپوزیشن پارٹیوں کے صدارتی امیدوار اور سابق مرکزی وزیر خزانہ یشونت سنہا نے آج ڈالر کے مقابلے روپے کی قدر میں گراوٹ پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی یا مرکزی حکومت کو اس معاملے میں جواب دینا چاہیئے۔ یشونت سنہا نے صدارتی انتخاب کے پیش نظر یہاں کانگریس ارکان اسمبلی کے ساتھ میٹنگ کے بعد پریس کانفرنس میں سوالوں کا جواب دیتے ہوئے یہ بات کہی۔ اس موقع پر کانگریس کے سینئر لیڈر اور سابق وزیراعلٰی کمل ناتھ بھی موجود تھے۔

یشونت سنہا نے کہا کہ 2014ء میں جب مودی وزیر اعظم بنے، تب ڈالر کی قیمت 58.44 روپے تھی جو آج بڑھ کر 79.86 روپے ہوگئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستانی کرنسی کی قدر اس سے زیادہ کبھی نہیں گری۔ اس کے باوجود حکومت اس معاملے پر کچھ نہیں کہہ رہی ہے۔ یشونت سنہا جو کبھی بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) میں اہم عہدوں پر فائز رہ چکے ہیں، نے کہا کہ جس وقت منموہن سنگھ وزیر اعظم تھے، اس وقت ڈالر کے مقابلے روپے کی قدر کم ہونے پر مودی خود سوال کرتے ہوئے اس وقت کے وزیراعظم سے جواب کی توقع رکھتے تھے۔ ایسی حالت میں مودی کو یا ان کی حکومت کو ملک کے لوگوں کو جواب دینا چاہیئے

یہ بھی دیکھیں

دشمن نیویارک میں ایرانی قوم کی آواز کو دبانے میں ناکام رہا:ایرانی صدر

تہران:ایرانی صدر آیت اللہ سید ابراہیم رئیسی نے کہا کہ دشمنوں نے سرتوڑ کوشش کی …