منگل , 27 ستمبر 2022

عام روسی شہری یوکرین کی فوج کے نشانے پر ہیں: روس

ماسکو:روس کے بلگورود سرحدی علاقے کے گورنر نے کہا ہے کہ یوکرین کی گولہ باری کے نتیجے میں ایک دیہی علاقے سے شہریوں کو محفوظ مقامات پر منتقل کردیا گیا ہے۔رشیا ٹوڈے کی رپورٹ کے مطابق، یوکرین کی سرحد کے قریب واقع کراسنی ہوتور قصبے سے عام شہریوں کے انخلا کو مکمل کردیا گیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق اس قصبے کے رہنے والوں کو محفوظ مقام پر منتقل کیا گیا ہے۔ ایک شہری کا کہنا تھا کہ یوکرینی افواج نے اس قصبے کو بھاری توپوں سے نشانہ بنایا ۔ یہ حملہ نیوزویک جریدے سے انٹرویو میں یوکرین کے لوہانسک اوبلاست علاقے کے گورنر کے اس بیان کے بعد ہوا ہے کہ یوکرینی افواج روس کو باہر نکالنے کے لئے کچھ بھی کرنے کے لئے تیار ہیں۔

دوسری جانب یوکرین کی وزارت دفاع کے ترجمان ایگور کوناشنکوف نے دعوی کیا کہ روس نے گذشتہ روز فضائی اور میزائیلی حملوں اور بھاری توپوں سے یوکرین کے مختلف علاقوں کو نشانہ بنایا ہے جس میں پانچ سو عام یوکرینی شہری جان سے ہاتھ دھو بیٹھے۔انہوں نے کہا کہ خرسون کے ایک علاقے میں یوکرین کی افواج بھاری نقصان اٹھا کر پسپائی پر مجبور ہوگئیں۔

کوناشنکوف نے بتایا کہ یوکرینی افواج کے آٹھ ٹینک، برّی افواج کی تیرہ مخصوص گاڑیاں اور گیارہ بکتر بند گاڑیاں تباہ ہوگئیں اور ڈیڑھ سو یوکرینی فوجی بھی موت کے گھاٹ اتار دیئے گئے۔

دریں اثنا امریکی ایوان بالا میں ایک قانونی مسودہ تیار کیا جا رہا ہے جس کی منظوری کی صورت میں روس کو دہشت گرد حامی ملک قرار دیا جائے گا۔ اس بل کے حامی امریکی ڈیموکریٹ سنیٹر، ریچرڈ بلومینٹل نے دعوی کیا ہے کہ روس کے خلاف ایسے بل کی ضرورت ہر دور سے زیادہ محسوس ہو رہی ہے۔ اس بل کے دیگر حامی سینیٹر لنڈسی گراہام نے بھی دعوی کیا ہے کہ روس کو دہشت گردی کا حامی ملک قرار دینے سے کیف سمیت امریکی اتحادیوں کو ایک ٹھوس حمایتی پیغام جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ اس بل کے پاس ہونے کی صورت میں امریکی عدالتوں میں روس کے خلاف کیس درج کیا جاسکے گا۔ لنڈسی گراہام نے دعوی کیا کہ یوکرین میں روس کے اقدامات کی بنیاد پر، ماسکو کو سخت سزا اور پابندیوں کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

رائیٹرز خبررساں ادارے کے مطابق اس بل پر ووٹنگ کے لئے ابھی تک کوئی تاریخ طے نہیں کی گئی ہے۔ادھر ماسکو نے واشنگٹن کو آگاہ کردیا ہے کہ روس کو دہشت گردی کا حامی ملک قرار دینے کی صورت میں، دونوں ممالک کے سفارتی تعلقات بری طرح متاثر ہوسکتے ہیں حتی کہ تعلقات مکمل طور پر منقطع ہونے کا امکان بھی موجود ہے۔

 

یہ بھی دیکھیں

پاک فوج کا ہیلی کاپٹر بلوچستان میں گر کر تباہ، 6 اہلکار شہید

کوئٹہ:پاک فوج کے شعبۂ تعلقاتِ عامہ (آئی ایس پی آر) نے بتایا ہے کہ پاک …