بدھ , 28 ستمبر 2022

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سرکاری دورے پر چین پہنچ گئے

بیجنگ: آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سرکاری دورے پر چین پہنچ گئے، چین نے ہنگامی طور پر پاکستان کے سیلاب زدگان کے لیے 100 ملین یوآن امداد کا اعلان کردیا ساتھ ہی امدادی کارروائیوں میں فنی تعاون کی پیشکش بھی کردی۔

آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ چین کے دو روزہ سرکاری دورے پر ہیں۔ اس موقع پر آرمی چیف کی چینی وزیر دفاع سے ملاقات ہوئی۔

چینی وزیر دفاع نے کہا کہ چین پاکستان اور فوج کے ساتھ اپنے تعلقات کو بڑی اہمیت دیتا ہے اور تعاون کو مزید فروغ دینا چاہتا ہے، سی پیک کی ترقی کا مقصد دونوں ممالک کے عوام کو فائدہ دینا ہے، منصوبہ دونوں ممالک کے عوام کی خوشحالی کا منصوبہ ہے، پاکستان اور پاک چین فوجی تعاون باہمی تعلقات کا ایک اہم ستون ہے۔

چینی وزیر دفاع نے سی پیک منصوبے کیلئے سیکیورٹی اقدامات پر آرمی چیف کا شکریہ ادا کیا اور خطے میں امن و استحکام کیلئے آرمی چیف کے کردار کو سراہتے ہوئے کہا کہ امید ہے کہ سی پیک منصوبے بر وقت مکمل ہوں گے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق چینی وزیر دفاع کا کہنا تھا کہ چین پاکستان میں سیلاب متاثرین کیلئے امدادی کارروائیوں میں فنی مدد کے لیے تیار ہے۔ انہوں ںے پاک فوج کے امدادی و بحالی کاموں کی تعریف کی۔آرمی چیف نے سیلاب متاثرین کی مدد جاری رکھنے پر چینی وزیر دفاع کا شکریہ ادا کیا۔

آرمی چیف کے دورۂ چین کے اثرات سامنے آنا شروع ہو گئے۔ چین نے ہنگامی بنیادوں پر سیلاب زدگان کے لیے 100 ملین یوآن دینے کا اعلان کردیا جب کہ پیپلز لبریشن آرمی کی جانب سے سیلاب زدگان کے لیے 100 ملین یوآن دینے کا اعلان کیا گیا ہے۔

اس طرح چین سیلاب زدگان کے لیے مجموعی طور پر 500 ملین یوآن امداد دے گا۔ چینی امداد 71.3 ملین ڈالر اور پاکستانی کرنسی میں 15.8 ارب روپے بنتی ہے۔

یہ بھی دیکھیں

پنجاب میں تعلیمی اداروں میں منشیات فروشی پر عمرقید کی سزا کیلئے قانون سازی

لاہور:چیئرمین پاکستان تحریک انصاف اور سابق وزیراعظم عمران خان ایک روزہ دورے پر لاہور ہیں، …