ہفتہ , 26 نومبر 2022

پیوٹن نے یوکرین کے 4 علاقے روس میں ضم کرنے کا اعلان کردیا

ماسکو:روسی صدر ولادیمیر پیوٹن نے یوکرین کے 4 علاقوں کو روس میں ضم کرنے کا باضابطہ اعلان کردیا۔ڈونیٹسک، لوہانسک، خیرسون اور زاپورژیا کو روس میں شامل کرنے کے لیے ایک تقریب منعقد کی گئی۔ تقریب میں یوکرینی علاقوں کے روسی حمایت یافتہ رہنما بھی موجود تھے۔ ان 4 علاقوں کے شہریوں کو روسی شہریت دی جائے گی۔

اے ایف پی کے مطابق جمعے کو روس کے صدر ولادیمیر پیوٹن نے مغرب کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ ماسکو کے زیرانتظام چار علاقوں کے لوگ ہمیشہ کے لیے ہمارے شہری بن گئے ہیں۔

روسی صدر کا کہنا تھا کہ سوویت یونین کا ٹوٹنا روسیوں کے لیے کڑوا سچ ہے مگر سوویت یونین اب نہیں رہی۔ ہم ماضی کو واپس نہیں لا سکتے اور روس کو اس کی اب ضرورت بھی نہیں ہے۔ ہم اس کے بنانے کی کوشش نہیں کر رہے۔صدر پیوٹن کا کہنا تھا کہ روس نئے ضم شدہ علاقوں سمیت اپنی سرزمین کی سالمیت کا دفاع جاری رکھے گا۔

واضح رہے کہ یوکرینی علاقوں ڈونیٹسک، لوہانسک، خیرسون اور زاپورژیا میں گزشتہ ہفتے ریفرنڈم ہوا تھا۔دوسری جانب یورپی رہنماؤں نے ایک بیان میں یوکرین کے علاقوں کے روس کے ساتھ الحاق کو غیرقانونی قرار دیا ہے۔ یورپی رہنماؤں کا کہنا ہے کہ وہ روس میں یوکرین کے چار علاقوں کی شمولیت کو کبھی تسلیم نہیں کریں گے۔

یہ بھی دیکھیں

روس کیخلاف پابندیوں کا 9واں پیکج تیار کر رہے ہیں:یورپی یونین کمیشن

کیف:روس کے ساتھ قیدیوں کے تبادلے میں یوکرائن کے 50 فوجیوں کو رہا کر دیا …