ہفتہ , 26 نومبر 2022

الحشد الشعبی اور عراقی فوج نے داعش کے خلاف آپریشن کا آغاز کر دیا

بغداد:دہشت گرد گروہ داعش کے خلاف عراقی رضاکار فورس الحشد الشعبی اور عراقی فوج نے آپریشن کا آغاز کر دیا ہے۔عراقی رضاکار فورس الحشد الشعبی اور سیکورٹی فورسز اور عراقی فوج نے موصل کے جنوبی علاقوں کو دہشت گردوں سے پاک کرنے کے لیے بڑے پیمانے پر آپریشن شروع کردیا ہے ۔

فارس نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق پاپولر موبلائزیشن آرگنائزیشن نے صوبہ نینویٰ کے موصل شہر کے جنوب میں واقع "الحضر” علاقے میں سیکورٹی فورسز اور عراقی فوج کے ساتھ ایک بڑے مشترکہ آپریشن کے آغاز کی خبر دی ہے۔

المعلومہ ویب سائٹ کے مطابق الحشد الشعبی کی 21ویں، 25ویں اور 44ویں بریگیڈ کی افواج نے انٹیلی جنس فورسز، فوج اور عراق کی داخلی سلامتی کے ادارے کے ساتھ مل کر داعش کے ٹھکانوں کو تباہ کرنے کے لئے سرچ یہ آپریشن شروع کیا ہے۔

"الحضر” علاقے کی پاکسازی کا آپریشن کل سے شروع ہو گیا ہے۔ عراقی انٹیلی جنس آرگنائزیشن نے کل اطلاع دی تھی کہ داعش کے ٹھکانوں کی نشاندہی کے بعد عراقی فوج کے F-16 لڑاکا طیاروں نے داعش دہشت گردوں کے چار ٹھکانوں کو نشانہ بنایا، ان حملوں میں داعش کے پانچ دہشت گرد مارے گئے.

ان حملوں کے بعد سیکیورٹی فورسز اور انسداد دہشت گردی یونٹ کے دستے پاکسازی کے لئے علاقے میں داخل ہوئے اور اس دوران کئی بارودی سرنگیں بھی دریافت کی گئیں اور انہیں ناکارہ بنا دیا گیا۔ عراقی انٹیلیجنس آرگنائزیشن کے مطابق آپریشن اب بھی جاری ہے۔

 

یہ بھی دیکھیں

خیبرپختونخوا: ٹی ٹی پی دہشتگردوں کے ساتھ فائرنگ کے تبادلے میں 2 فوجی اہلکار شہید

بنوں:خیبرپختونخوا کے ضلع بنوں کی تحصیل لکی مروت میں وانڈا پشان کے قریب سیکیورٹی فورسز …