پیر , 5 دسمبر 2022

نابلس میں جو کچھ ہو رہا ہے وہ منظم جرائم اور دہشت گردی ہے:اسلامی جہاد

مقبوضہ بیت المقدس:مغربی کنارے میں اسلامی جہاد کے میڈیا ترجمان نے کہا: نابلس شہر میں جو کچھ ہو رہا ہے وہ صیہونی حکومت کی طرف سے منظم جرائم اور دہشت گردی ہے جس سے ہمارے عوام کو خوف نہیں آئے گا اور ہمارے عزم کو متزلزل نہیں کرے گا۔

فلسطین الیوم نیوز سائٹ کی رپورٹ کے مطابق طارق عزالدین نے کہا: قابض قدس حکومت نابلس میں ہمارے لوگوں کو نشانہ بنانا ہمارے عوام کے ارادوں میں خلل پیدا نہیں کرتا۔ نابلس آگ کا پہاڑ ہو گا، مضبوط اور متکبر، اور اس مجرم دشمن کو ثابت کر دے گا کہ شہر کا دو ہفتے کا محاصرہ انہیں ہماری مرضی کے خلاف مکمل شکست کے سوا کچھ نہیں دے گا۔

انہوں نے مزید کہا: "ہمیں یقین ہے کہ نابلس بریگیڈ، الاقصی بٹالینز، القسام اور عرین الاسود بٹالین میں موجود بہادر جنگجو اور قدس بٹالین شہر اور عوام پر حملہ کرنے کے لیے دشمن کے وحشیانہ اقدامات کو جاری رکھنے کی اجازت نہیں دیں گے۔

انہوں نے فلسطینی نوجوانوں سے بھی مطالبہ کیا کہ وہ اس جارح حکومت کے خلاف اٹھ کھڑے ہوں تاکہ وہ ثابت کر سکیں کہ نابلس، جنین اور تمام فلسطینی مزاحمت کاروں کی حمایت میں متحد ہیں۔

صیہونی حکومت کی قابض فوج کے ہاتھوں منگل کی صبح سویرے صیہونی فوج کے حملے کے نتیجے میں 6 فلسطینی شہری شہید اور 22 زخمی ہو گئے۔

یہ بھی دیکھیں

موساد کو اسرائیل کے حکام کی ناکامی کا علم ہے: ایران

تہران:ایران کے ایک اعلی سکیورٹی آفیسر نے کہا ہے کہ اسرائیل کی بد نام زمانہ …