پیر , 28 نومبر 2022

یورپی ممالک اپنے داعشی شہریوں کو واپس بلانے کے لئے سنجیدہ نہیں، عراق

بغداد:عراق کے وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ یورپی ممالک اپنے شہری داعشیوں کو واپس بلانے کے لئے سنجیدہ نہیں ہیں۔ عراق کے وزیر خارجہ فؤاد حسین نے ایک بیان میں کہا کہ اس وقت ستر ہزار داعشی دہشت گردوں کے گھرانے شام میں موجود ہیں جو کہ عراق کے لئے ایک سنجیدہ خطرہ شمار ہوتے ہیں

انہوں نے کہا کہ میں داعشی نظرئے سے لاحق خطرے کی جانب سے خبردار کرتا ہوں کیونکہ یہ نظریہ آج بھی عراق اور شام کے ایک حصے میں پایا جاتا ہے اور اگر ان دہشت گرد عناصر نے اپنی سرگرمیاں بحال کیں تو صورتحال بگڑ سکتی ہے۔

عراقی وزیرخارجہ فواد حسین نے مزید کہا کہ شام میں واقع الہول کیمپ میں اکیاون یا باون ممالک کے شہری موجود ہیں جس کے نتیجے میں یہ کیمپ داعشی افکار کی ترویج کا مرکز بنا ہوا ہے۔

انہوں نے کہا کہ جو بچے ان کیمپوں میں قید ہیں وہ اب داعشی طرز فکر اور تعلیم کے ساتھ نوجوانی میں داخل ہوچکے ہیں جو کہ خطرے کی گھنٹی ہے۔

 

یہ بھی دیکھیں

بیلاروس کے وزیر خارجہ اچانک انتقال کرگئے

منسک:بیلاروس کے وزیر خارجہ ولادیمیر ماکی 64 برس کی عمر میں اچانک انتقال کرگئے۔ بیلاروس کی …