پیر , 5 دسمبر 2022

ترکی دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ہمیشہ ایران کے شانہ بشانہ کھڑا ہے:ترک وزیر خارجہ

انقرہ:ایران کے وزیر خارجہ نے اپنے ترک ہم منصب کے ساتھ ایک ٹیلیفونک رابطے کے دوران دو طرفہ دلچسپی کے اہم ترین امور پر بات چیت اور تبادلہ خیال کیا۔ ایران کے وزیر خارجہ امیر عبداللہیان نے اپنے ترک ہم منصب مولود چاووش اوغلو کے ساتھ دوطرفہ، علاقائی اور عالمی امور کے سلسلے میں باہمی دلچسپی کے اہم ترین مسائل کے بارے میں بات چیت اور تبادلہ خیال کیا۔

گفتگو میں ایران کے وزیر خارجہ نے ترکی کے قومی دن پر مبارکباد پیش کی اور ترکیہ کی ایک کان میں دھماکے سے متعدد ترک شہریوں کے جاں بحق اور زخمی ہونے کے واقعے کا ذکر کیا اور ترک حکومت اور عوام کے لیے تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے زخمیوں کے لیے شفائے عاجل کی دعا کی۔

امیر عبد اللہیان نے شیراز حملے کے حوالے سے ترک وزیر خارجہ کے اظہار ہمدردی کو سراہا اور اس بات پر زور دیا کہ حالیہ ہفتوں میں ہمارے بعض دشمنوں نے حالیہ واقعات کو غلط استعمال کرتے ہوئے ایران میں عدم تحفظ اور عدم استحکام پیدا کرنے کی کوشش کی ہے اور داعش کے دہشت گردانہ حملے کی بنیاد رکھی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے کئی بار ملک کے خلاف ایسی سازشوں کا سامنا کیا ہے اور ہمیشہ فخر کے ساتھ ان پر قابو پایا ہے۔

ترک وزیر خارجہ چاوش اوغلو نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران اور جمہوریہ ترکیہ صرف دو ہمسایہ ممالک نہیں ہیں بلکہ دو برادر ملک ہیں جو ہمیشہ اچھے اور برے وقت میں ایک دوسرے کا ساتھ دیتے رہے ہیں۔

انہوں نے نہ شیراز حملے کی مذمت کرتے ہوئے دوبارہ ایران کی حکومت اور عوام کے ساتھ تعزیت کا اظہار کیا اور کہا ہم دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ہمیشہ ایران کے ساتھ رہے ہیں اور رہیں گے۔

ترک وزیر خارجہ نے ایک بار پھر ایران اور جمہوریہ آذربائیجان کے درمیان مذاکرات کے عمل کا خیرمقدم بھی کیا اور اس بات پر زور دیا کہ دونوں ملک ترکیہ کے دوست ہیں اور ان دونوں ملکوں کے درمیان دوستی ترکیہ کو خوش کرتی ہے۔

یہ بھی دیکھیں

صیہونی صدر کے دورۂ بحرین کے موقع پر تل ابیب ایئرپورٹ کی چیک پوسٹ پر حملہ

یروشلم:صیہونی حکومت کے صدر کے پہلے دورۂ بحرین کے موقع پر، تل ابیب کے بین …