جمعہ , 9 دسمبر 2022

کراچی میں پاکستان کی پہلی الیکٹرک بس کا آزمائشی سفر

کراچی: شہر قائد میں پاکستان کی پہلی الیکٹرک بس سروس کی آزمائشی سروس شروع ہوگئی، الیکٹرک بس سندھ آرکائیوز کمپلیکس سے سی ویو تک چلائی گئی، یہ بسیں 20 منٹ میں چارج ہوکر 240 کلومیٹر فاصلہ طے کرنے کی صلاحیت رکھتی ہیں۔

ذرائع کے مطابق یہ منصوبہ پیپلز بس سروس کے فیز ٹو کے تحت چلایا جارہا ہے۔ آزمائشی بس سروس کے دوران وزیر اطلاعات، ٹرانسپورٹ اور ماس ٹرانزٹ شرجیل انعام میمن، وزیر محنت سعید غنی، مشیر وزیر اعلیٰ سندھ جیل خانہ جات اعجاز جکھرانی، ایڈمنسٹریٹر کراچی بیریسٹر مرتضیٰ وہاب، سیکرٹری ٹرانسپورٹ عبدالحلیم شیخ، ایم ڈی ماس ٹرانزٹ اتھارٹی کیپٹن (ر) الطاف حسین ساریو اور دیگر نے سفر کیا اور بسوں میں سہولت کا جائزہ لیا۔

میڈیا سے گفتگو میں شرجیل میمن نے کہا کہ آج پیپلز بس سروس کے دوسرے فیز کا آغاز ہوگیا، ماحول دوست بسوں کی آج ٹیسٹ ڈرائیور تھی، 10 روز بعد باقاعدہ بس سروس کا آغاز کردیا جائے گا۔انہوں نے بتایا کہ یہ یورپین معیار کی بسیں ہیں جن کی لمبائی 12 میٹر ہے، کوشش ہے کہ جہاں ٹریفک کم ہو وہاں یہ بسیں چلائی جائیں جس کے لیے سروے جاری ہے، جلد روٹس کا تعین کیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ جس کمپنی کے ساتھ الیکٹرک بسوں کے پروجیکٹ پر کام کر رہیں وہ شمسی توانائی کے سینٹرز بنائے گی جس سے یہ بسیں چارج کی جائیں گی, ابتدائی طور پر 50 الیکٹرک بسیں کراچی پہنچ چکی ہیں ہماری کوشش ہے کہ کراچی میں الیکٹرک بسوں کا مینو فیچرنگ پلانٹ لگائیں جس کے لیے چین، یورپ اور مقامی کمپنیوں سے مذاکرات جاری ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ہماری کوشش ہے کہ کراچی میں دنیا کی 2 سے 3 بڑی کمپنیاں پلانٹ لگائیں جس سے سندھ میں روزگار کے مواقع پیدا ہوں، یہ الیکٹرک بسیں، ہائبرڈ ڈیزل بسوں سے دگنا قیمت پر پاکستان آرہی ہیں کراچی میں پلانٹ لگنے سے ان کی درآمدی ڈیوٹی میں کمی آئے گی اور کم قیمت پر بسیں دست یاب ہوں گی۔

ایک پر انہوں نے کہا کہ پیپلز بس سروس کی ریڈ بسز کا کرایہ 50 روپے ہے، گلشن حدید کا بڑا روٹ ہے اس کا کرایہ 100 روپے ہے، اس کے علاوہ اورنج لائن کا کرایہ بھی مناسب ہے، ان تمام بسوں کا کرایہ نجی ٹرانسپورٹ کے کرایوں سے کم ہے اور سروس سب سے بہترین ہے، عوام میں پیپلز بس سروس کو بھرپور پذیرائی ملی ہے، الیکٹرک بسوں کا کرایہ ان بسوں سے کم ہوگا، اس سروس کو سندھ کے دوسرے بڑے شہروں میں بھی توسیع دی جائے گی۔

پروجیکٹ ڈائریکٹر این آر ٹی سی صہیب شفیق نے بتایا کہ 12 میٹر بسوں میں 32 نشستیں عام شہریوں اور 2 نشستیں خصوصی افراد کے لیے ہیں اور 35 سے 40 افراد کھڑے ہو کر سفر کرسکتے ہیں، مجموعی گنجائش 70 سے 90 افراد کی ہے، یہ بسیں 20 منٹ میں چارج ہوجاتی ہیں اور ایک چارج میں 240 کلومیٹر فاصلہ طے کرنے کی صلاحیت رکھتی ہیں، بسوں کو چارج کرنے کے لیے یو پی موڑ بس ڈپو پر چارجنگ سسٹم لگایا گیا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

نیب کا اسحٰق ڈار کے منجمد اثاثے بحال کرنے کے احکامات

اسلام آباد:وزیر خزانہ اسحٰق ڈار کو بڑا ریلیف دیتے ہوئے قومی احتساب بیورو (نیب) نے …