بدھ , 7 دسمبر 2022

صیہونی حکومت مزاحمتی محاذ کے سامنے شکست کھا چکی ہے: فلسطینی تنظیمیں

مقبوضہ بیت المقدس:فلسطینی مزاحمتی گروہوں نےایریئل صیہونی کالونی میں شہادت پسندانہ کارروائی کو تل ابیب کے دائیں بازو کے انتہاپسندوں کے منہ پر ایک زوردار طمانچہ قرار دیا ہے۔ حماس تنظیم کے ترجمان عبداللطیف القانوع نے کہا ہے کہ فلسطینی نوجوانوں کی کارروائیاں اس بات کی علامت ہیں کہ صیہونی حکومت مزاحمتی محاذ کے سامنے شکست کھا چکی ہے۔

جہاد اسلامی فلسطین کے ترجمان نے بھی کہا کہ ایریئل صیہونی کالونی کے اندر مزاحمتی کارروائی نے صیہونی حکومت کی کمزور بنیادوں اور ناکارہ سیکورٹی اور فوجی نظام کا پردہ فاش کردیا ہے۔

پاپولر فرنٹ فار لبریشن آف فلسطین کی جانب سے جاری شدہ بیان میں بھی فلسطینیوں کی تازہ مجاہدانہ اور شہادت پسندانہ کارروائی کو صیہونیوں کے لئے ایک اہم پیغام کا حامل قرار دیا۔ اس بیان میں کہا گیا ہے کہ فلسطینی عوام کا تل ابیب کو یہ پیغام ہے کہ غاصب صیہونی حکومت کے خاتمے اور فلسطینیوں کے حق کے حصول تک استقامت کا سلسلہ جاری رہے گا۔

ڈیموکریٹک فرنٹ فار لبریشن آف فلسطین کے بیان میں بھی سلفیت میں ہونے والی مجاہدانہ کارروائی کو فلسطینی مجاہدین کا صیہونی حکومت کو ایک منہ توڑ جواب قرار دیا گیا۔

صیہونی ذرائع کے مطابق آج دوپہر کو فلسطینی مجاہدین نے غرب اردن میں واقع صیہونی کالونی ایریئل کے قریب دو الگ الگ مزاحمتی کارروائیوں میں تین صیہونیوں کو ہلاک اور کم از کم تین دیگر کو زخمی کردیا۔ اس واقعے کے بعد صیہونی حکومت نے پورے علاقے میں ہائی الرٹ کا اعلان کردیا ہے۔

 

یہ بھی دیکھیں

قطر ورلڈ کپ میں فلسطینیوں کی حمایت ’کشنرپیس ‘ اسکیم کی ناکامی کا ثبوت

دوحہ:ایک امریکی ویب سائٹ نے لکھا ہے کہ قطر میں ہونے والے ورلڈ کپ میں …