اتوار , 5 فروری 2023

افغانستان میں دہشت گرد دوبارہ منظم ہوئے تو کارروائی کریں گے، امریکا

واشنگٹن:امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان نیڈ پرائس کا کہنا ہے کہ محسوس ہوتا ہے کہ طالبان وعدوں کو پورا کرنے کے قابل نہیں ہیں۔ افغانستان میں دہشت گرد دوبارہ منظم ہوئے تو کارروائی کریں گے۔ہفتہ وار بریفنگ میں ترجمان امریکی محکمہ خارجہ نے کہا کہ امریکا کو خدشہ ہے کہ افغانستان ایک بار پھردہشتگردوں کی پناہ گاہ نہ بن جائے۔

نیڈ پرائس کے مطابق پاکستان کے ساتھ تعلقات کو قدر ی نگاہ سے دیکھتے ہیں،پاکستان خطے میں اہم شراکت دار ہے۔امریکا پاکستان میں کسی ایک امیدوار یا کسی ایک شخصیت کو ترجیح نہیں دیتا۔

افغانستان میں دہشتگردوں کے دوبارہ جمع ہونے کی صورت میں منظم کارروائی کی دھمکی دینے والے نیڈ پرائس نے کہا کہ دیکھنا ہے دہشتگرد افغانستان کو پاکستان پرحملوں کے لیے لانچ پیڈ کے طور پراستعمال نہ کریں۔

ترجمان امریکی محکمہ خارجہ نےخارجہ سیکریٹری ڈاکٹر اسد مجید کی ماضی میں ڈونلڈ لوسے ملاقات کے بعد پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان کی جانب سے امریکا مخالف مہم سے متعلق سوال پرکہا کہ ہم نے مسلسل ان افواہوں کی تردید کی ہے، ہم صرف پاکستان کے آئینی نظام کے مفاد میں ہیں اور کسی ایک امیدوار یا کسی ایک شخصیت کو دوسرے پر ترجیح نہیں دیتے۔

نیڈ پرائس نے بریفنگ میں بتایا کہ دو طرفہ تعلقات بڑھانے کے لیے پاکستان کو پیشہ ورانہ فوجی تعلیم، آپریشنل اورتکنیکی کورسز فراہم کرنے والے انٹرنیشنل ملٹری ایجوکیشن اینڈ ٹریننگ پروگرام سے گرانٹ ملتی ہے، یہ تعاون پاکستان کی خطرات سے نمٹنے کی صلاحیتوں کو بہتربناتا ہے اور دونوں ممالک کے فوجی تعاون کو مستحکم بناتا ہے۔

انہوں نے واضح کیا کہ امریکا خطے میں شراکت داروں کے ساتھ مل کر کام کرنے کیلئے پُرعزم ہے، خطرات سے نمٹنے کے لیےجوبن پڑا کریں گے۔

یہ بھی دیکھیں

بنگلادیش نے سعودی عرب سے پٹرول ادھار مانگ لیا

ڈھاکا: ڈالرز کی ادائیگیوں میں عدم توازن کے شکار بنگلا دیش نے سعودی عرب سے …