ہفتہ , 4 فروری 2023

آذربائیجان نے باضابطہ طور پر اسرائیل میں اپنا پہلا سفیر مقرر کر دیا

باکو:آذربائیجان کے صدر نے فلسطینی مسلمانوں کے حقوق اور قربانیوں کو بھلا کرغاصب صیہونی ریاست میں اپنا پہلا سفیر مقرر کر دیا ہے۔ النشرہ ویب سائیٹ کی رپورٹ کے مطابق آذربائیجان کے صدر الہام علی اف نے غاصب صیہونی ریاست سے رابطے کے تیس سال بعد مختار محمدوف کو غاصب ریاست میں اپنا پہلا سفیر مقرر کردیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق آذربائیجان نے فلسطینیوں کی امنگوں اور غاصب صیہونی دشمن کے چنگل میں گرفتار قبلۂ اول مسجد اقصیٰ کے ساتھ غداری کرتے ہوئے اسرائیل میں اپنے سفیر کی تعیناتی کا اعلان کر دیا۔ صیہونی اخبار یروشلم پوسٹ کے مطابق گزشتہ چند ماہ سے تل آبیب میں آذربائیجان کا سفارت خانہ زیر تعمیر تھا۔

سابق صیہونی وزیر اعظم یائیر لاپید نے آذربائیجانی پارلیمنٹ کے اس فیصلے کا خیرمقدم کیا تھا جس میں غاصب ریاست میں باکو کا سفارت خانہ کھولنے کے حق میں ووٹ دیا گیا تھا۔ یائیر لاپید نے کہا تھا کہ تل آبیب میں آذربائیجان کا سفارت خانہ کھلنا دونوں ممالک کے درمیان قریبی تعلقات کی علامت ہے۔

رپورٹ کے مطابق آذربائیجان کی وزارت خارجہ کا ایک اعلی سطحی وفد غاصب صیہونی ریاست کے دورے پر ہے۔ آذربائیجان کی وزارت خارجہ کے اعلان کے مطابق آذربائیجان کے سینئر نائب مشیر کی سربراہی میں ایک وفد نے تل ابیب کا تین روزہ دورہ کیا اور دونوں ممالک کی وزارت خارجہ کے درمیان نئے تعلقات کا آغاز ہوا ہے۔

 

یہ بھی دیکھیں

عراقی معاشرہ اور نوجوان ثقافتی یلغار کا شکار ہیں:آیت الله سید محمد تقی مدرسی

بغداد:عراقی معروف عالم دین آیت الله سید محمد تقی مدرسی نے، حوزہ ہائے علمیه عراق …