پیر , 25 ستمبر 2023

حکومتی کوشش سے کرم ایجنسی میں متحارب فریقین کے درمیان معاہدہ طے پاگیا

پشاور: خیبرپختونخوا کے ضلع کرم کے علاقے پارا چنار میں کئی روز سے جاری اراضی تنازع پر حکومتی جرگہ کی سرپرستی میں فریقین کے مابین معاہدہ طے پاگیا۔ذرائع کے مطابق معاہدہ طے پانے کے بعد فریقین کے مابین جنگ بندی ہوگئی ہے دونوں گروپوں کے مورچہ زن مسلح افراد واپس نے گھروں کو چلے گئے ہیں جبکہ پولیس اور قانون نافذ کرنے والے اداروں نے مورچوں میں پوزیشنز سنبھال لی ہیں۔

محکمہ داخلہ خیبرپختونخوا کے ذرائع کا کہنا ہے کہ ایک سال کے لیے امن معاہدہ طے گیا گیا ہے جس پر دونوں فریقین راضی ہے۔ معاہدے کے تحت امن و امان میں خلل ڈالنے والے کسی بھی فرد کو تحفظ نہیں دیا جائے گا اور خلاف ورزی کی صورت میں 12 کروڑ روپے جرمانہ جبکہ قانونی کارروائی کی جائے گی۔

ذرائع کے مطابق معاہدہ فوری نافذ العمل ہوگا۔ دونوں فریقین کے کامیاب مذاکرات کے بعد کرم کے تمام راستوں کو آمد و رفت کے لیے کھول دیا گیا ہے۔واضح رہے کہ کرم میں گزشتہ کئی روز سے زمین کے تنازع پر دو گروپوں کے درمیان شدید لڑائی جاری تھی، جس میں 7 افراد جاں بحق جبکہ متعدد زخمی بھی ہوئے۔

یہ بھی دیکھیں

ثاقب نثار، عطا بندیال، اعجاز الاحسن اور جسٹس عائشہ کے خلاف شکایات بے بنیاد قرار

اسلام آباد: نئے چیف جسٹس پاکستان کے آتے ہی سپریم جوڈیشل کونسل متحرک ہو گئی …