منگل , 5 دسمبر 2023

طوفان الاقصیٰ کی جنگ میں پہلی بار "عیاش 250” میزائل کا استعمال

مقبوضہ بیت المقدس:القسام بٹالین نے الاقصیٰ طوفان کی لڑائی میں پہلی بار عیاش 250 میزائل کا استعمال کیا اور صیہونی ہیڈکوارٹر کو نشانہ بنایا۔حماس کی عسکری شاخ القسام بٹالین نے اعلان کیا ہے کہ انہوں نے صیہونی حکومت کے شمالی علاقے صفد کے مقبوضہ علاقے میں واقع ہیڈ کوارٹر کو عیاش 250 میزائل سے نشانہ بنایا ہے۔

قسام بٹالین نے اعلان کیا کہ یہ حملہ عام شہریوں کی نقل مکانی اور ہلاکت کے جواب میں کیا گیا۔اس رپورٹ کے مطابق یہ پہلا موقع ہے کہ الاقصیٰ طوفان کی لڑائی میں عیاش 250 میزائل کا استعمال کیا گیا ہے۔صہیونی ذرائع نے بیک وقت غزہ کی پٹی پر راکٹ حملوں کا اعلان کیا۔

چند گھنٹے قبل تحریک حماس کے عسکری ونگ عزالدین قسام بریگیڈ کے ترجمان ابو عبیدہ نے ایک بیان میں کہا تھا کہ صہیونی دشمن بہت کمزور اور ہماری قوم کو دو بار بے گھر کرنے سے خوفزدہ ہے۔

انہوں نے تاکید کی: میں صہیونی دشمن سے کہتا ہوں کہ ہمارے انسائیکلوپیڈیا میں ہجرت اور ہجرت اس وقت تک موجود نہیں جب تک کہ ہم مقبوضہ شہروں کی طرف ہجرت نہ کریں۔

القسام کے ترجمان نے نوٹ کیا کہ ہم نے بین گوریون ہوائی اڈے پر بمباری کی اور ہمارے پاس ابھی بھی بہت سے منصوبے ہیں۔ابو عبیدہ نے اس بات پر زور دیا کہ آنے والے وقتوں میں ہمارے پاس بہت سے منصوبے ہیں۔

صیہونی حکومت کے ذرائع ابلاغ نے اعتراف کیا ہے کہ الاقصی طوفان آپریشن کے آغاز سے اب تک 1500 صہیونی ہلاک اور 3400 دیگر زخمی ہو چکے ہیں۔

الاقصیٰ طوفانی لڑائی کے آغاز کے بعد سے صہیونی فوج ہر روز اپنے فوجیوں کی ہلاکتوں کے ناموں کا اعلان کرتی رہی ہے جس کی وجہ اس کے فوجیوں میں ہلاکتوں کی زیادہ تعداد اور ملک میں داخلی ردعمل کا خدشہ ہے۔

یہ بھی دیکھیں

ترک صدر اردوغان نے نیتن یاہو کو غزہ کا قصائی قرار دیدیا

انقرہ:ترک صدر رجب طیب اردوغان نے نیتن یاہو کو غزہ کا قصائی قرار دیا ہے۔ترکی …