منگل , 12 دسمبر 2023

اللہ سے وعدہ ہے ہم نہیں جائیں گے، پرعزم فلسطینی بچوں کا غزہ نہ چھوڑنےکا پیغام

غزہ :غزہ پر اسرائیلی فوج کی جانب سے ذمینی ،فضائی اور بحری حملے جاری ہیں تاہم صہیونی فوج کے مظالم بھی غزہ کے معصوم بچوں کے عزم کومتزلزل کرنے میں کامیاب نہیں ہوسکے ہیں۔غزہ پر اسرائیلی جارحیت پانچویں ہفتے میں داخل ہوگئی ، اسرائیل نے ہسپتالوں، مساجد، سکولوں اور ایمبولینسوں کو بھی نشانہ بنایا ہے، ہزاروں خاندان اقوام متحدہ کے تحت قائم کیےگئے سکولوں اور دیگر اداروں کے ہسپتالوں میں پناہ لیے ہوئے ہیں۔

اسرائیلی فوج کی جانب سے شہریوں کو غزہ خالی کرنے کی وارننگ دی جاچکی ہے، اسرائیل چاہتا ہے کہ غزہ کے شہری مصری علاقے سینا میں چلے جائیں۔

ان سب مشکلات کے باوجود غزہ کے بچے پرعزم ہیں کہ وہ اپنی سرزمین چھوڑ کر کہیں نہیں جائیں گے ، اس حوالے سے سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہو رہی ہے جس میں غزہ کے بچے فلسطین کا معروف انقلابی ترانہ گارہے ہیں جس کا مطلب ہے کہ ” اللہ سے وعدہ ہے کہ ہم نہیں چھوڑیں گے، اللہ سے وعدہ ہے کہ ہم بھوکے مرجائیں گے لیکن ذلت کا راستہ اختیار نہیں کریں گے "۔

ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ بہت سے فلسطینی بچے جمع ہیں اور سپیکر پر انقلابی ترانہ لگا ہوا ہے، بچے تالیاں بجا کر نعرے لگا رہے ہیں اور ترانےکے اشعار دہرا رہے ہیں، بچوں کے چہروں پرکسی قسم کا خوف نظر نہیں آرہا اور کیمپ میں کسی میلے کا سماں ہے۔

عرب میڈیا کے مطابق یہ ویڈیو خان یونس کے علاقے میں اقوام متحدہ کے تحت چلنے والے ایک سکول میں قائم عارضی کیمپ کی ہے جہاں حالیہ بمباری میں بے گھر ہونے والے متعدد فلسطینی خاندان پناہ لیے ہوئے ہیں۔

عرب میڈیا کے مطابق بچے اس ترانے سے دراصل غزہ کی آبادی کی جبراً نقل مکانی کے مجوزہ منصوبوں کا جواب دے رہے ہیں اور ہم آواز ہو کر قابض فوج کے سامنے ثابت قدم رہنے کے عزم کا اظہار کر رہے ہیں۔

واضح رہے کہ 7 اکتوبر سے اب تک جاری اسرائیل فلسطین جنگ میں فلسطینی شہدا کی تعداد 9 ہزار سے زائد ہو گئی ہے جن میں 70 فیصد بچے اور خواتین شامل ہیں۔

یہ بھی دیکھیں

صہیونی وحشیانہ حملوں نے مغربی تہذیب و تمدن کے چہرے سے نقاب اتار دیا،آیت اللہ سید علی خامنہ ای

تہران:بسیجیوں کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے رہبر معظم انقلاب اسلامی نے کہا کہ طوفان …