منگل , 25 جنوری 2022

تجزیات

ایران شام اسٹریٹجک فوجی معاہدہ اور ممکنہ اثرات

تحریر: حسن کاظمی قمی (عراق میں ایران کے سابق سفیر) گذشتہ ہفتے بدھ کے دن اسلامی جمہوریہ ایران کے چیف آف جنرل اسٹاف میجر جنرل محمد حسین باقری نے شام کا دورہ کیا۔ اس دورے میں دونوں ممالک کے درمیان فوجی تعاون کے حوالے سے ایک اہم اور بنیادی معاہدہ طے پایا۔ اس معاہدے کا مقصد ایران اور شام کے …

مزید پڑھیں »

عہدِ غلامی کی یادگاروں سے چھٹکارے کا وقت آپہنچا

تحریر:اکرام سہگل کورونا وائرس کی وبا نے نسلی منافرت کے خلاف اٹھنے والی تحریکوں کے ساتھ ساتھ ایک انتہائی اہم موضوع ’استعماریت‘ یا ’’نوآبادیات‘‘ (کولونیل ازم) پر بحث کا از سر نو آغاز ہوا ہے۔ اس میں یہ سوال بہت اہم ہے کہ نوآبادیاتی تاریخ کو کس انداز سے دیکھنا چاہیے۔ وبا کے باعث اختیار کی گئی تنہائی نے بے …

مزید پڑھیں »

روسی ریفرنڈم کے مقاصد؛رپورٹ

ماسکو: (مضمون نگار روس کے دارالحکومت ماسکو میں برسوں سے مقیم ہیں۔ وہ روس کی سیاست پر گہری نظر رکھتے ہیں اور اپنی ویب سائٹ کے ذریعے روس کے داخلی معاملات اور معاشرت وثقافت کے مختلف پہلوؤں سے اردو کے قارئین کو روشناس کرتے رہتے ہیں۔ چناں چہ روس میں ہونے والے حالیہ ریفرنڈم کے بارے میں ان کا زیرنظر …

مزید پڑھیں »

بوسنیا سے کشمیر تک، قتل عام اور بے حسی کی داستان

رپورٹ: ٹی ایچ بلوچ عالم اسلام داخلی کمزوریوں اور خارجی سازشوں کیوجہ سے ابتلاء کا شکار ہے۔ کئی زخم تازہ ہیں اور اس دوران برطانوی خبر رساں ادارے نے 1995ء میں بوسنیائی مسلمانوں کے قتل عام سے متعلق رپورٹ جاری کی ہے۔ دوسری طرف کشمیر کئی مہینوں سے لاک ڈاون کا شکار ہے اور صیہونی غاصبین فلسطین میں مسلمانوں کے …

مزید پڑھیں »

کیا ترکی اسلام کی طرف واپس آرہا ہے؟

تحریر: ثاقب اکبر بہت سے تجزیہ کاروں کی رائے ہے کہ اردوان کا ترکی کمال اتاترک کے ترکی سے بہت مختلف ہے۔ اس کا تازہ ترین شاہد استنبول میں تاریخی آیا صوفیہ کی میوزیم کی حیثیت ختم کرکے اسے مسجد میں تبدیل کر دیا جانا ہے۔ اس کے بارے میں گذشتہ جمعہ کو ترکی کی عدالت نے فیصلہ کیا تھا۔ …

مزید پڑھیں »

آیا صوفیہ ، ارطغرل ، مسجدِ قرطبہ

تحریر: وسعت اللہ خان اگلے ہفتے ترکی کی اعلیٰ عدالت استنبول کے آیا صوفیہ میوزیم کو دوبارہ مسجد میں تبدیل کرنے کی سرکاری درخواست پر فیصلہ سنانے والی ہے۔ آیا صوفیہ ڈیڑھ ہزار برس پرانی عمارت ہے اور پانچ سو سینتیس عیسوی میں مشرقی سلطنتِ روم کے شہنشاہ جسٹینین نے دارالحکومت قسطنطنیہ کے شایانِ شان بطور گرجا تعمیر کروائی۔نو سو …

مزید پڑھیں »

کمزور اپوزیشن

تحریر: عبدالقادر حسن یہ درست سہی کہ وزیر اعظم عمران خان ایک خوش قسمت انسان ہیں اپنی نیم سیاسی اور اب مکمل سیاسی زندگی میں ان کی خوش قسمتی کی انتہاء نہیں مگر میں انھیں اتنا خوش نصیب نہیں سمجھتا کہ جب ان کے خلاف اپوزیشن اٹھ کھڑی ہوگی تو نہ اس کا کوئی نام ہوگا اور نہ اس کا …

مزید پڑھیں »

نواز شریف اور زرداری کی مجرمانہ سیاست

تحریر: سلیم صافی عمران خان صاحب پر بہت سارے لوگوں نے احسانات کئے ہوں گے لیکن ان کے اصل محسن میاں نواز شریف اور آصف علی زرداری ہیں ۔ان دونوں کی حرکتوں کی وجہ سے وہ وزارت عظمیٰ کے لئے چوائس بنے اور آج بھی اگر وہ سمجھتے ہیں کہ ان کے سوا کوئی چوائس نہیں تو اس کی وجہ …

مزید پڑھیں »

سیاسی پرندے

تحریر: سہیل وڑائچ سیاسی منڈیر پر بیٹھا کالا کوا خبردار کر رہا ہے کہ اگلے چھ ماہ کے گرد سرخ دائرہ لگا ہوا ہے۔ سیاست کو سرخ دائرے کے حصار سے نکلنے کے لئے عقابی برق رفتاری سے کام کرنا ہوگا۔ اب صرف ترجمان طوطوں سے کام نہیں چلے گا۔ حکومت کو ڈیلیوری دکھانا ہوگی، گورننس کو نتائج دینا ہوں …

مزید پڑھیں »

منفی ایک کا مطلب ’منفی ایک‘ نہیں ہوتا!

تحریر:شہباز علی خان نومبر 1988 میں غیر جماعتی بنیادوں پر انتخابات کرانے کا اعلان کیا گیا مگر پھر صدر کی فضائی حادثے میں شہادت کے بعد سینٹ کے چیئرمین غلام اسحاق خان نے صدر پاکستان کا عہدہ سنبھال کر طے شدہ شیڈول کے مطابق نومبر ہی میں جماعتی بنیادوں پر انتخابات کروائے اور یوں پیپلز پارٹی اول نمبر پر آئی …

مزید پڑھیں »